کتاب: سہہ ماہی مجلہ البیان کراچی - صفحہ 18

جادو جنات سے بچیں حافظ عبدالعزیز بٹ (1)جادو کرنا اور کروانا حرام ہے: فرمان باری تعالی ہے : [وَاتَّبَعُوْا مَا تَتْلُوا الشَّيٰطِيْنُ عَلٰي مُلْكِ سُلَيْمٰنَ ۚ وَمَا كَفَرَ سُلَيْمٰنُ وَلٰكِنَّ الشَّيٰطِيْنَ كَفَرُوْا يُعَلِّمُوْنَ النَّاسَ السِّحْرَ][البقرۃ:102] ’’ا ور اس چیز کے پیچھے لگ گئے جسے شیاطین (حضرت) سلیمان کی حکومت میں پڑھتے تھے۔ سلیمان نے تو کفر نہ کیا تھا، بلکہ یہ کفر شیطانوں کا تھا، وہ لوگوں کو جادو سکھایا کرتے تھے‘‘ یہ آیت اس بات کی دلیل ہے کہ جادو حرام ہے نیز جادو شریعت محمدیہ ہی میں نہیں بلکہ تمام ادیان میں حرام ہے . فرمان نبوی صلی اللہ علیہ وسلم : ’’ اجْتَنِبُوا السَّبْعَ المُوبِقَاتِ۔۔۔۔الشِّرْكُ بِاللہِ، وَالسِّحْرُ ’’

  • فونٹ سائز:

    ب ب