کتاب: سہہ ماہی مجلہ البیان کراچی - صفحہ 33

حاسد کی علامات: 1-محسود کو دیکھتے ہی حاسد کے چہرے کا رنگ بدل جاتا ہے اور اس کا ہنستا خوشگوار چہرہ یک لخت تاریک ہوجاتاہے ۔ 2-حاسدشخص ہمیشہ اللہ کی تقدیر سے نالاں اور برہم رہتا ہے۔ 3-حاسد اگر پوری دنیاکےخزانوں کا مالک بن جائے تب بھی شکوہ ہی کرتا رہے گااور اللہ بچائےکہ وہ اللہ کا شکر کم ہی اداکرتاہے۔ 4-حاسد جس سے حسد کرتاہے اس کی غلطیوں اور کوتاہیوں کی تلاش میں رہتاہے او رانہیں مجالس میں بڑھا چڑھا کر بیان کرتا ہے۔ 5-محسود کی خوبیوں اور اچھائیوں کو چھپاتا ہے ان کے بارے میں جان بوجھ کر انجان بنا رہتا ہے اور لوگوں میں انہیں معمولی بنا کر پیش کرتا ہے ۔ 6-حاسد زیادہ دیر تک خاموش نہیں رہ سکتا وہ محسود کے کلام کا جواب تو ہنستے ہوئے مزاحیہ انداز میں دیتاہے لیکن اس کے دل کا بھر پور کینہ اور بغض اس کی نظروں سے واضح ہوتاہے۔ 7-حاسد محسود پر ہر وقت بادلیل وبے دلیل واضح طور پر رسواکن تنقید کرتا رہتاہے۔ 8-حاسد ہر وقت موقع کی تلاش میں رہتا ہے وہ کوئی ایسا موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیتا کہ جس میں محسود کو جانی یا مالی نقصان سے دوچار کیا جاسکتاہو۔ 9-آخری بات یہ ہے کہ حاسد کا خون ہروقت کھولتا رہتا ہے ، وہ ایک پریشان طبیعت شخص ہوتا ہے ، ذلت اور بدحالی ہر وقت اس کے چہرے پر چھائی رہتی ہے۔ جادو گر کی علامات: 1-مریض سے اس کا اور اس کی والدہ کا نام پوچھنا۔ 2-مریض سے اس کی استعمال شدہ اشیاء مثلاً کنگھی ، کپڑے اور بال طلب کرنا۔

  • فونٹ سائز:

    ب ب