کتاب: سہہ ماہی مجلہ البیان کراچی - صفحہ 165

نہ ہوتی ہو اور یہ تین علمائے کرام تھے شیخ الاسلام مولانا ابو الوفا ثناء اللہ امر تسری (م15 مارچ 1948ء) مناظر اسلام مولانا ابو القاسم سیف بنارسی (م25 نومبر 1949ء) امام العصر مولانا حافظ محمد ابراہیم میر سیالکوٹی (م 12 جنوری 1956ء) مولانا ابو القاسم بنارسی کا سن ولادت یکم شوال 1307ھ / 21 مئی 1890ء ہے ۔ ان کی تعلیم کا آغاز حفظ قرآن مجید سے ہوا علوم اسلامیہ کی تعلیم درج ذیل اساتذہ کرام سے حاصل کی۔ ۱۔ مولانا محمد سعید محدث بنارسی (والد محترم) (م 1322ھ) ۲۔ مولانا سید عبد الکبیر بہاری (م 1331ھ) ۳۔ مولانا حکیم عبد المجید بنارسی (م 1325ھ) ۴۔ مولانا شمس الحق عظیم آبادی (م 1334ھ) ۵۔ مولانا حافظ عبد المنان محدث وزیر آبادی (م 1334ھ) ۶۔ مولانا قاضی محمد بن عبد العزیز ( م 1330ھ) ۷۔شیخ الکل مولانا سید محمد نذیر حسین محدث دہلوی (م 1330ھ) ۸۔علامہ شیخ حسین بن محسن انصاری الیمانی (م 1327ھ) 16 سال کی عمر میں علوم عالیہ وآلیہ سے فراغت پائی اور اپنے والد کے قائم کردہ مدرسہ سعیدیہ بنارس میں تدریس پر مامور ہوئے اور 48 سال تک قرآن وحدیث کا درس دیتے رہے صحافت سے بھی تعلق رہا اور ایک ماہنامہ ’السعید‘ جاری کیا جو تھوڑا عرصہ جاری رہا۔  تصانیف : مولانا ابو القاسم بنارسی صاحب تصانیف کثیرہ تھے ان کی تصانیف کی تعداد (70) کے قریب ہے آپ نے تقریباً ہر موضوع پر قلم اُٹھایا جن کی تفصیل درج ذیل ہے۔

  • فونٹ سائز:

    ب ب