کتاب: دوستی اور دشمنی کا اسلامی معیار - صفحہ 22
زبان بولنا،لباس میں انکی نقل اتارنا اور کھانے پینے میں انکے طور وطریقے اختیار کرنا وغیرہ ۔ (۲)ان کے علاقوں میں اقا مت اختیا ر کرنا یعنی کفار کے علاقوں میں مستقل اقامت اختیار کرلینا اور مسلمانوں کے علاقوں میں سکونت پذیر ہونے سے گریز کرنا بھی ان سے محبت کی دلیل ہے ۔ حالانکہ محض اپنے دین کے تحفظ کے خاطر کفار کے علاقوں سے بچ نکلنا اور مسلمانوں کی سرزمین میں سکونت اختیار کرنا ایک شرعی مطلوب ہے ۔بلکہ اس عظیم الشان مقصد کے حصول کیلئے ہجرت کرنا ہر مسلمان کا شرعی فریضہ ہے ،کیونکہ سرزمینِ کفر میں سکونت پذیر ہونا کفار سے محبت کی دلیل ہے ۔ یہی و جہ ہے کہ اللہ تبارک وتعالیٰ نے ایک مسلمان کا اگر وہ ہجرت پر قادر ہو ،کفار کے درمیان رہنا حرام قرار دیا ہے ۔ چنانچہ قرآن پاک میں ارشاد ہے: