کتاب: دوستی اور دشمنی کا اسلامی معیار - صفحہ 42
(۹) کمز و ر کے سا تھ مشفقا نہ بر تا ؤ: یہ مشفقانہ حسنِ سلوک بھی باہمی محبت کی علامت ہے ۔نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: [ لَیْسَ مِنَّا مَنْ لَّمْ یُؤَقِّرْ کَبِیْرَنَا وَیَرْحَمْ صَغِیْرَنَا ] ترجمہ:جو ہمارے بڑوں کا احترام نہیں کرتا اور چھوٹوں پر شفقت نہیں کرتا وہ ہم میں سے نہیں۔ ایک اور حدیث میں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: [ ھَلْ تُنْصَرُوْنَ وَتُرْزَقُوْنَ اِلاَّبِضُعَفَا ئِکُمْ ] ترجمہ:تمہیں صرف تمہارے کمزور لوگوں کی بدولت رزق بھی دیا جاتا ہے اور مدد بھی کی جاتی ہے ۔ اللہ تعالیٰ نے فرمایا: [وَاصْبِرْ نَفْسَکَ مَعَ الَّذِیْنَ یَدْعُوْنَ رَبَّہُمْ بِالْغَدٰوةِ وَالْعَشِیِّ یُرِیْدُوْنَ وَجْہَہٗ وَلَا تَعْدُ عَیْنٰکَ عَنْہُمْ ۚ تُرِیْدُ زِیْنَةَ الْحَیٰوةِ الدُّنْیَا ] ترجمہ: اور جو لوگ صبح وشام اپنے پروردگار کو پکارتے ہیں اور اس کی خوشنودی کے