کتاب: طہارت کے مسائل - صفحہ 79

بَعْدَ الْوُضُوْئِ ۔رَوَاہُ التِّرْمِذِیُّ حضرت عائشہ رضی اللہ عنہا فرماتی ہیں کہ رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے لئے ایک کپڑا تھا جس سے آپ صلی اللہ علیہ وسلم وضو کے بعد بدن پونچھتے۔اسے ترمذی نے روایت کیاہے۔ عَنْ مَیْمُوْنَۃَ رَضِیَ اللّٰہُ عَنْہَا فِیْ صِفَۃِ غُسْلِ الْجَنَابَۃِ قَالَتْ فَغَسَلَ رِجْلَیْہِ ثُمَّ اَتَیْتُہُ بِالْمِنْدِیْلِ فَرَدَّہُ ۔رَوَاہُ مُسْلِمٌ حضرت میمونہ رضی اللہ عنہا نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کے غسل جنابت کا طریقہ بیان کرتے ہوئے فرماتی ہیںکہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے (غسل کے بعد)اپنے دونوں پاؤں(پھر)دھوئے۔اس کے بعد میں نے آپ صلی اللہ علیہ وسلم کو (بدن پونچھنے کے لئے)تولیہ دیا تو آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے واپس کردیا۔اسے مسلم نے روایت کیاہے۔ (مسئلہ نمبر146)وضو کے اعضاء ایک بار یا دو بار یا تین بار دھونے جائز ہیں ۔اس سے زائد دھونا گناہ ہے۔ عَنِ ابْنِ عَبَّاسٍ رَضِیَ اللّٰہُ عَنْہُمَا قَالَ : تَوَضَّأَ النَّبِیُّ صلی اللہ علیہ وسلم مَرَّۃً مَرَّۃً ۔ رَوَاہُ اَحْمَدُ وَ الْبُخَارِیُّ وَ مُسْلِمٌ وَ اَبُوْدَاؤٗدَ وَالنَّسَائِیُّ وَالتِّرْمِذِیُّ وَابْنُ مَاجَہْ حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہا سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے وضو کرتے ہوئے ایک ایک مرتبہ اعضاء دھوئے ۔ اسے احمد، بخاری، مسلم، ابودائود، نسائی، ترمذی اور ابن ماجہ نے روایت کیاہے۔ عَنْ عَبْدِاللّٰہِ بْنِ زَیْدٍ رضی اللہ عنہ اَنَّ النَّبِیَّ صلی اللہ علیہ وسلم تَوَضَّأَ مَرَّتَیْنِ مَرَّتَیْنِ ۔ رَوَاہُ اَحْمَدُ وَالْبُخَارِیُّ حضرت عبداللہ بن زید رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے وضو کیا اور دو، دو مرتبہ اعضاء دھوئے۔ اسے احمداور بخاری نے روایت کیاہے۔ عَنْ عَمْرِو بْنِ شُعَیْبٍ عَنْ اَبِیْہِ عَنْ جَدِّہٖ قَالَ : جَائَ اَعْرَابِیٌّ اِلٰی رَسُوْلِ

  • فونٹ سائز:

    ب ب