کتاب: طہارت کے مسائل - صفحہ 91

اَلْـاَحَادِیْثُ الضَّعِیْفَۃُ وَالْمَوْضُوْعَۃُ ضعیف اور موضوع احادیث 1 حَبَّذَا السِّوَاکُ یَزِیْدُ الرَّجُلَ فَصَاحَۃً۔ مسواک کا استعمال کیاہی خوب ہے کہ آدمی کی فصاحت میں اضافہ کرتاہے۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے ملاحظہ ہو’’الفوائد المجموعۃ‘‘للشو کانی حدیث نمبر20 2 غَسْلُ الْاِنَائِ وَطُہْرُ الْفَنَائِ یُوْرِثَانِ الْغِنٰی ۔ برتن کا دھونا اور صحن کی صفائی کرناغنا کا سبب بنتے ہیں۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر6 3 اَلْوُضُوْئُ مِنَ الْبَوْلِ مَرَّۃً وَمِنَ الْغَائِطِ مَرَّتَیْنِ وَمِنَ الْجَنَابَۃِ ثَلاَثًا ۔ پیشاب کے بعد ایک مرتبہ وضو کرنا چاہئے،قضائے حاجت کے بعد دو مرتبہ اور جنابت کے بعد تین مرتبہ۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر27 4 اَلْمَضْمَضَۃُ وَالْاِسْتِنْشَاقُ ثَلاَثًا فَرِیْضَۃٌ لِّلْجُنُبِ ۔ تین مرتبہ کلی اور تین مرتبہ ناک میں پانی چڑھاناجنبی کے لئے فرض ہے۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ حدیث نمبر12 5 کَانَ النَّبِیُّ صلی اللہ علیہ وسلم یَسْتَاکُ عَرَضًا وَیَشْرَبُ مَضًّا نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم مسواک اوپر سے نیچے کے رخ کرتے اور پانی گھونٹ گھونٹ کرکے پیتے۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر24 6 بُنِیَ الدِّیْنُ عَلَی النِّظَافَۃِ دین کی بنیاد صفائی پر ہے۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر27 7 مَنِ اغْتَسَلَ مِنَ الْجَنَابَۃِ حَلاَلاً اَعْطَاہُ اللّٰہُ قَصْرٍ مِنْ دُرَّۃٍ بَیْضَائَ وَکُتِبَ لَہٗ بِکُلِّ قَطْرَۃٍ ثَوَابُ اَلْفِ شَہِیْدٍ

  • فونٹ سائز:

    ب ب