کتاب: طہارت کے مسائل - صفحہ 95

الْوُضُوْئَ فِیْ الْحَرِّ الشَّدِیْدِ کَانَ لَہٗ مِنَ الْاَجْرِ کِفْلٌ )) جو شدید سردی میں وضو کرے اس کے لئے دوہرا اجر ہے اور جو شدید گرمی میں وضو کرے اس کے لئے اکہرا اجر ہے۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر840 (( مَنْ قَرَاَ فِیْ اَثْرِ وُضُوْئٍ : { اِنَّا اَنْزَلْنٰـہُ فِیْ لَیْلَۃِ الْقَدْرِ } مَرَّۃ وَاحِدَۃً کَانَ مِنَ الصِّدِّیْقِیْنَ وَمَنْ قَرَاَہَا مَرَّتَیْنِ کُتِبَ فِیْ دِیْوَانِ الشُّہَدَائِ وَمَنْ قَرَاَہَا ثَـلَا ثًا حُشِرَ مَعَ النَّبِیِّیْنَ )) جس نے وضو کرنے کے بعد’’اِنَّا اَنْزَلْنٰہُ…‘‘ایک بار پڑھا وہ صدیقین میں سے ہوگیااور جس نے دوبار پڑھا اس کا نام شہداء کے دفتر میں لکھا گیااور جس نے تین بار پڑھا اس کا حشر انبیاء کرام کے ساتھ ہوگا۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے بحوالہ سابق حدیث نمبر1449 (( قَصُّوْا اَظْفَارَکُمْ ، وَادْفِنُوْا قَلاَمَتِکُمْ ، وَنَقُّوْ بِرَاجِمَکُمْ ، وَنَظِّفُوْا لِثَاثَکُمْ مِنَ الطَّعَامِ وَاسْتَاکُوْا ، وَلاَ تَدْخُلُوْا عَلَیَّ قَحْزًا بَخْرًا )) اپنے ناخن کاٹواور کٹے ہوئے ناخن دفن کرو،اور اپنی انگلیوں کے جوڑ صاف کرواور کھانے سے اپنے مسوڑھوں کو صاف کرو اور مسواک کرواور مجھ سے پریشان پراگندہ حال ملاقات نہ کرنا۔ وضاحت : یہ حدیث موضوع ہے ملاحظہ ہو سلسلہ احادیث الضعیفہ والموضوعہ1472

  • فونٹ سائز:

    ب ب