کتاب: مقالات محدث مبارکپوری - صفحہ 137